کششِ شغل

vector-clipart-mobile-phoneسیل فون پاکستانیوں کی ایجاد نہیں مگر ”مس کال“ ہے۔ فیس بک میسیج، ٹیکسٹ مسیج، ٹینگو، وائبر،واٹس اپ جہاں کام نہ کرے،وہاں ایک ”مس کال“ سب کام چھوڑ کر بڑے بڑوں کو مدار کی طرف کھینچ لیتی ہے۔ ”کششِ شغل“ ایک بہت بڑی قوت ہے۔ لگے رہو پاکستانیوں۔
(علیل جبران)

کامیاب زندگی

کامیاب زندگی کا مطلب ہے جائداد کا رقبہ بڑا اور بیوی کا کم، کار نئی اور کارپوریشن پرانی، نوٹ گنتے گنتے ختم نہ ہوں اور بچے دو کے بعد نہ ہوں۔ کھانا صرف فائیو اسٹار کا نصیب ہو ۔ ڈرائیورز،ماسی، مالیوں اور دیگر نوکر چاکر کی تعداد خاندان کے افراد سے زیادہ ہو۔ گھر الیکٹرانک آلات اور دواؤں سے بھرا ہو۔ جب خود ملنے جائیں تو ہر دروازہ کھلا ہو اور خود ان سے ملاقات کی حاجت اپائنمنٹ کے بغیر پوری نہ ہو۔ ایک باڈی کیلئے چالیس باڈی گارڈز ہوں ۔ جہاں جائیں کیمروں اور فلیش کی بہتات ہو۔ ہر لفظ خبر بنے اور ہر ادا ویڈیو۔ جب دنیا سے گذر جائیں تو کوئی یہ نہ کہے کہ بہت ہی گیا گذرا تھا۔

فیس بک اور ہیرے جیسے دوست

میں فیس بک کو دھوکہ نہیں مانتا۔اگر آپ اپنی اصلی شناخت کے ساتھ کوئ مقصد اور وژن رکھتے ہیں،اپنی تحریروں کو اون کرتے ہیں،دوسرے کی رائے کا احترام کرتے ہیں تو آپ کو ہمیشہ اچھے اور سچے دوست ملیں گے۔ مجھے سینکڑوں ایسے مخلص اور ہیرے جیسے دوست فیس بک پر ملے جنھیں میں اصلی زندگی میں ڈھونڈتا ہی رہا۔ میں اب فیس بک پر خوش ہوں کیونکہ مجھے بزدل،منافق اور عیاروں سے چھٹکارا مل گیا ہے۔

دونوں ایک ہی تھالی کے چٹٌے بٹُے

تقدیرِِ سیاستِ دوراں دیکھئے! موقعہ کا فائدہ اٹھاکر،عمران خان کی غیر ذمےداریوں کو نشانہ بناتے ہوئے ، بلاول زرداری کو داخل کرنے کی کوشش کی جارہی ہے اور بےوقوف عوام واہ واہ کررہی ہے۔ ویسے عمران خان نے حددرجہ مایوس کیا مگر اس کا مطلب یہ نہیں کہ بلاول قوم کا مسیحا ہے۔ اگر پی پی اتنی طالبان مخالف ہے تو اپنے پانچ سالہ دور میں اس نے طالبان کے خلاف ایک بھی بڑا کریک ڈاؤن کیوں نہیں کیا؟ بلاول نئی بوتل میں پرانی زہریلی شراب ہے۔

آج کی بات

mirza-ghalib

غالب اِس دور میں ہوتے تو ہماری ان سے خوب جمتی کیونکہ ہم رہتے ہی اْس شہر میں ہیں جہاں ہر شئے کا جمنا ضروری ہے۔ بتانا مقصود درجہ حرارت تھا جو اس وقت مائنس 20 ہے۔ غالب کا نام اس لئیے لے لیا کہ آپ سب کی توجہ حاصل ہوجائے۔ توجہ حاصل کرنے کیلئے عجیب عجیب پاپڑ بیلے جاتے ہیں ، یہ فیس بک نے سکھایا ہے ۔ Like کا نشہ بھی دیگر روایاتی نشوں سے کم نہیں۔

Next Entries »